تین سالوں میں پاکستانی قرضے میں 26ارب ڈالر کا اضافہ


اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک) قومی اسمبلی کی قائمہ کمیٹی برائے اقتصادی امور کے اجلاس میں انکشاف کیا گیا ہے کہ پاکستان کا بیرونی قرضہ 122ارب روپے ہوچکا ہے۔ میرخان محمد جمالی کی زیر صدارت ہونے والے اجلاس کے دوران بتایا گیا کہ 2018میں یہ قرضہ 122

ارب ڈالر تک پہنچ گیا ہے۔ کمیٹی ارکان کو بریفنگ کے دوران بتایا گیا کہ جون 2018میں پاکستان کا کل قرضہ 96ارب ڈالر تھا۔ جبکہ تین سال کے عرصے میں ملکی قرضے میں مجموعی طور پر 26ارب ڈالر کا اضافہ ہوا ہے۔ملک کے ذمہ واجب الادا کل قرضہ 122ارب 44کروڑ ڈالر ہے۔ دوسری جانب یہ بھی انکشاف ہوا ہے کہ آئی ایم ایف سے کیے گئے معاہدے کے تحت ڈالر کو 172یا 174روپے تک رکھا جائے گا۔



اس وقت سب سے زیادہ مقبول خبریں


Copyright © 2017 https://pakistanlivenews.com All Rights Reserved
About Us | Privacy Policy | Disclaimer | Contact Us