ایل این جی ریفرنس کی سماعت،سابق وزیراعظم کی قسمت کافیصلہ کب ہوگا؟احتساب عدالت سے بڑی خبرآگئی


اسلام آباد(نیوزڈیسک)احتساب عدالت نے شاہد خاقان عباسی اور دیگر ملزموں کیخلاف ایل این جی ریفرنس کی سماعت جمعہ تک ملتوی کردی۔میڈیا رپورٹس کے مطابق احتساب عدالت میں شاہد خاقان عباسی اور دیگر کیخلاف ایل این جی ریفرنس کی سماعت ہوئی،سابق وزیراعظم شاہد خاقان عباسی سمیت دیگر ملزمان عدالت پیش ہوئے،وکیل ملزم نے کہاکہ آج بھی ہڑتال ہے عدالت سماعت ملتوی کرے ۔جج اعظم خان نے کہاکہ ایسے نہ کریں سپریم

کورٹ اورہائیکورٹ میں وکلا مسلسل پیش ہو رہے ہیں ،یہ آپ کی مرضی ہے کہ آپ ہڑتال کرناچاہتے ہیں یا نہیں ،اگرجرح نہیں کرنی تو ہم الگے گواہ کا بیان ریکارڈ کر لیتے ہیں ۔وکیل ملزم نے کہاکہ ہماری عدالت سے درخواست ہے کہ ہڑتال کے باعث سماعت نہ کی جائے،شاہد خاقان عباسی نے کہاکہ بیرسٹر ظفر اللہ بھی آج عدالت میں موجود نہیں ہیں،جج احتساب عدالت نے کہاکہ نیا نیب وکلا بھی ہڑتال پر ہیں،نیب پراسیکیوٹرز نے کہا کہ نہیں ہم تیار ہیں ۔عدالت آمد کے موقع پر سابق وزیراعظم شاہد خاقان عباسی نے اسلام آباد میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ آئین و قانون کے راستے پر چلنے تک ملک آگے نہیں بڑھ سکتا، قومی اسمبلی یا پنجاب میں عدم اعتماد اقتدار نہیں، ملک کی خاطر ہوگا۔انہوں نے کہاکہ وزیراعظم کے خود اعتماد کا ووٹ لینے کی آئین و قانون میں جگہ نہیں، عمران خان نے تقریر کے دوران اپوزیشن کو دھمکیاں دیں، وزیراعظم کی تقریر پر سپیکر قومی اسمبلی خاموش رہے، عمران خان کا اپنا وزیر خزانہ ایم این ایز کے ہاتھوں شکست کھا گیا، وزیر خزانہ کو اخلاقی طور پر مستعفی ہو جانا چاہیئے تھا۔شاہد خاقان عباسی کا کہنا تھا کہ حکومت سینیٹ الیکشن میں ہارس ٹریڈنگ کرچکی، بلوچستان 70 کروڑ، سندھ میں 35 کروڑ دیئے گئے، ارکان اسمبلی سے 50، 50 کروڑ فنڈز کا وعدہ رشوت نہیں تو کیا ہے ؟ وزیراعظم کو اداروں نے اعتماد کا ووٹ لے کر

دیا۔



اس وقت سب سے زیادہ مقبول خبریں


Copyright © 2017 https://pakistanlivenews.com All Rights Reserved
About Us | Privacy Policy | Disclaimer | Contact Us