اب کراچی کے سارے مسئلے حل ہوجائیںگے وفاقی حکومت نے ایم کیو ایم کو راضی کر لیا کیا کیا معاملات طے پاگئے، اہم خبر


کراچی (مانیٹرنگ ڈیسک) ایم کیو ایم پاکستان کے مرکز بہادرآباد پر گورنر سندھ عمران اسماعیل اور وفاقی وزیر اسدعمرکے ہمراہ اعلی سطحی وفد کی آمد،کنوینر ڈاکٹرخالد مقبول صدیقی،سینئر ڈپٹی کنوینر عامر خان اوراراکین رابطہ کمیٹی سے ملاقات۔ملاقات کے دوران تحریک انصاف اور ایم کیو ایم پاکستان کے مابین ہونے والے معاہدے ملک کی سیاسی

صورتحال پر تفصیل سے تبادلہ خیال کیا گیا۔بعد ازاں میڈیا نمائندگان سے گفتگو کرتے ہوئے ڈاکٹر خالد مقبول صدیقی نے کہا کہ تحریک انصاف اور ایم کیو ایم کے مابین ہونے والے معاہدے میں مشترکہ اور متفقہ نقطہ متنازعہ مردم شماری تھا جس کی جزویات پر
تفصیل کے ساتھ گفتگو کی گئی اور ہم اس نقطہ پر متفق ہوئے کہ آئیندہ ہونے والی مردم شماری قبل ازوقت منعقد کرائی جائی گی، یہ فیصلہ اس لیئے کیا گیا کہ2017میں ہونے والی مردم شماری پر نہ صرف سندھ اور بالخصوص کراچی بلکہ بلوچستان اور خیبر پختونخواہ میں بھی شدید تحفظات پائے جاتے ہیں اس موقع پر وفاقی وزیر اسد عمر نے قبل از وقت مردم شماری کے انعقاد کی تفصیلات سے آگاہ کرتے ہوئے کہا کہ کابینہ کے فیصلے کے مطابق اس مسئلہ کے حل کیلئے سید امین الحق کی سربرائی میں کابینہ کی ایک کمیٹی تشکیل دے دی گئی ہے جو اپنی سفارشات مرتب کر کے کابینہ کو پیش کرے گی جس کے بعد نئی مردم شماری از

سر نو کرائی جائیگی اس ضمن میں ایک ٹیکنیکل کمیٹی بھی تشکیل دی گئی ہے جس کا نوٹیفیکیشن ہو چکا ہے اور وہ پوری دنیا کے دیگر ممالک میں ہونے والی مردم شماری کا جائزہ لے کر ٹیکنیکل بنیادوں پر ایک نظام وضع کر کے کابینہ کی خصوصی کمیٹی کو اپنی سفارشات دے گی جس کے بعد وسائل کی تقسیم اور نئے انتخابات میں درست نمائندگی کی بنیاد بنے گی۔



اس وقت سب سے زیادہ مقبول خبریں


Copyright © 2017 https://pakistanlivenews.com All Rights Reserved
About Us | Privacy Policy | Disclaimer | Contact Us