پاک فوج نے گزشتہ دس سالوں میں مشرقی سرحد اور مغربی بارڈر سے ملک کو لاحق خطرات کو کیسے دور کیا تفصیل جان کر ہرپاکستانی کا سر فخر سے جھوم اٹھے گا


راولپنڈی (مانیٹرنگ ڈیسک) پاک فوج کے سربراہ میجر جنرل بابرافتخار نے واضح کیا ہے کہ پاک فوج نے گزشتہ ایک دہائی میں نہ صرف مشرقی سرحد پر اشتعال انگیزی کو ناکام بنایا ہے بلکہ مغربی سرحد سے دہشتگردانہ کوششوں کا بھی منہ توڑ جواب دیا ہے۔جی ایچ کیو میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے میجر جنرل بابر افتخار کا کہنا تھا کہ گزشتہ 10 سال پاکستان کے

لیے ہر لحاظ سے بہت چیلنجنگ رہے، اگر 2020 کی بات کی جائے تو اس سال سیکیورٹی چیلنجز کے علاوہ لوکسٹ (ٹڈی کے حملے) اور کووڈ جیسی عالمی وبا نے بھی پاکستان کی معیشت اور فوڈ سیکیورٹی کو خطرے میں ڈالے رکھا۔انہوں نے بتایا کہ پچھلی دہائی میں ایک طرف مشرقی سرحد اور لائن آف کنٹرول پر ہندوستان کی شرانگیزیاں جاری تھیں تو دوسری جانب مغربی سرحد پر کالعدم دہشتگرد نتظیموں ، ان کے جوڑ توڑ اور پشت پناہی کے ذریعے پاکستان کو عدم استحکام کا شکار کیا جا رہا تھا۔میجر جنرل بابر افتخار کا کہنا تھا کہ تمام تر چیلنجز کے باوجود تمام اداروں اور پوری قوم نے متحد ہو کر مشکلات کا سامنا کیا اور اللہ تعالیٰ نے ہمیں سرخرو کیا۔ان کا کہنا تھا کہ مغربی سرحد پر قبائلی علاقوں میں امن و امان بحال کرنے کے ساتھ ساتھ وہاں سماجی و معاشی اقدامات کا آغاز کیا جا چکا ہے، پاک افغان

اور پاک ایران سرحد کو محفوظ بنانے کے لیے مربوط اقدامات کیے گئے اور دہشتگردی کے خلاف کامیاب آپریشنز کے نتیجے میں ملک میں سیکیورٹی کی صورتحال بہت بہتر رہی



اس وقت سب سے زیادہ مقبول خبریں


Copyright © 2017 https://pakistanlivenews.com All Rights Reserved
About Us | Privacy Policy | Disclaimer | Contact Us