وزیراعظم عمرا ن خا ن نے آٹے کی قیمتوں میں اضافے کا نوٹس لے لیا


اسلام آباد( نیوز ڈیسک) وزیراعظم عمرا ن خا ن نے آٹے کی قیمتوں میں اضافے کا نوٹس لے لیا، وزیراعظم نے جہانگیر ترین اور خسروبختیار کو قیمتوں میں کمی کا ٹاسک سونپ دیا، وفاق نے پاسکو کے کوٹے سے خیبرپختواہ کو ایک لاکھ ٹن گندم فراہم کرے گا، جبکہ رواں سال 3 لاکھ ٹن گندم درآمد بھی کی جائے گی۔میڈیا رپورٹس کے مطابق وزیراعظم عمرا ن خا

ن نے آٹے کی قیمتوں میں اضافے کا نوٹس لیتے ہوئے پارٹی کے سینئر رہنماء جہانگیر ترین اور خسروبختیار کو قیمتوں میں کمی کا ٹاسک سونپ دیا۔وزیراعظم نے وزیرعلیٰ پنجاب اور وزیراعلیٰ خیبرپختونخواہ سے بھی مشاور ت کرنے کی ہدایت کردی ہے۔وفاق نے پاسکو کے کوٹے سے خیبرپختواہ کو ایک لاکھ ٹن گندم فراہم کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔حکومت رواں سال 3 لاکھ ٹن گندم درآمد بھی کرے گی۔ دوسری جانب وزیراعلیٰ پنجاب سردار عثمان بزدارنے بعض شہروں میں آٹے کی قیمتوں میں بلاجواز اضافے کا سخت نوٹس لیا ہے۔وزیراعلیٰ‌ پنجاب عثمان بزدار کا کہنا تھا کہ آٹے کی قیمتوں میں بلاجواز اضافہ کسی صورت برداشت نہیں کروں گا۔ عوام کو آٹے کی مقرر کردہ نرخوں پردستیابی یقینی بنائی جائے گی۔ گندم اورآٹے کی سپلائی اور ڈیمانڈکی سختی سے مانیٹرنگ کی جائے۔ سرکاری گندم کا آٹا اوپن مارکیٹ میں فروخت کرنے والی ملوں کو سیل کیا جائے گا۔ وزیراعلیٰ پنجاب سردار عثمان بزدارکے سخت احکامات پر محکمہ خوراک نےصوبہ بھر میں کریک ڈاؤن شرع کردیا ہے.

376فلورملوں کیخلاف کارروائی،9کروڑ 6لاکھ روپے جرمانہ،فرائض سے غفلت برتنے پر محکمہ خوراک کے افسروں کیخلاف ایکشن،15فلور ملوں کے لائسنس معطل کردیئے گئے۔180فلور ملوں کا گندم کا کوٹہ معطل کردیا گیا. وزیراعلیٰ پنجاب عثمان بزدار کی ہدایت پر فرائض سے غفلت برتنے اوربے ضابطگیوں میں ملوث محکمہ خوراک کے چار افسران کوعہدوں سے ہٹا دیاگیا۔ اس حوالے سے ڈسٹرکٹ فود کنٹرولرگوجرانوالہ روحیل بٹ اور ڈسٹرکٹ فوڈ کنٹرولر سیالکوٹ نصراللہ خان ندیم کو معطل کردیا گیا ہے،ڈپٹی ڈائریکٹر محکمہ خوراک فیصل آبادکامران بشیر اورڈسٹرکٹ فوڈ کنٹرولر وہاڑی صغیر احمد کو بھی عہدے سے ہٹا دیاگیا۔وزیراعلیٰ عثمان بزدار کی ہدایت پر پنجاب کے مختلف شہروں میں آٹے کی سپلائی کو یقینی بنانے کیلئے 126سیل پوائنٹس قائم کیے گئے ہیں. لاہورڈویژن میں 21سیل پوائنٹس پر ٹرکوں کے ذریعے ایکس مل ریٹ پر آٹے کی سپلائی شروع کردی گہے .راولپنڈی ڈویژن میں 55سیل پوائنٹس پر ٹرکوں کے ذریعے کنٹرول ریٹ پر آٹا فراہم کیا جارہا ہے۔ گوجرانوالہ ڈویژن میں 9سیل پوائنٹس پر ٹرکوں کے ذریعے کنٹرول ریٹ پر آٹے کی فراہمی کا آغازکردیا گیا ہے. بہاولپور ڈویژن میں 17سیل پوائنٹس پر ٹرکوں کے ذریعے آٹا فراہم کیا جارہا ہے۔ سیالکوٹ ضلع میں 24سیل پوائنٹس پر ٹرکوں کے ذریعے آٹے کی فراہمی شروع کردی گئی ہے۔



اس وقت سب سے زیادہ مقبول خبریں


Copyright © 2017 https://pakistanlivenews.com All Rights Reserved
About Us | Privacy Policy | Disclaimer | Contact Us