وزیراعظم کا مئوقف پاک فوج کی پالیسی بن گیا


لاہور (مانیٹرنگ ڈیسک)سینئرصحافی ارشاد بھٹی کا کہنا ہے کہ وزیراعظم عمران خان کا موقف پاک فوج کی پالیسی بن چکی ہے۔تفصیلات کے مطابق قاسم سلیمانی کے قتل کے بعد جمعہ کی شب کو آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ کو امریکی وزیر خارجہ مائیک پومپیو کی ٹیلی فون کال موصول ہوئی۔ اس رابطے کے دوران دونوں رہنماوں کے درمیان ایرانی جنرل

قاسم سلیمانی کی ہلاکت کے بعد سے پیدا ہونے والی صورتحال سے متعلق تفصیلی تبادلہ خیال کیا گیا۔آئی ایس پی آر کے مطابق آرمی چیف نے امریکی وزیر خارجہ سے گفتگو میں اس بات پر زور دیا کہ تمام فریقین خطے کے امن و استحاکم کے وسیع تر مفاد میں کشیدگی کو کم کرنے کیلئے مکمل تحمل کا مظاہرہ کریں اور تعمیری روابط قائم کریں۔اسی حوالے سے معروف صحافی ارشاد بھٹی نے سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹویٹر پر ٹویٹ کرتے ہوئے کہا اہے کہ آج پاک فوج نے جو امریکہ کو جنگ کا حصہ نہ بننے کا دو ٹوک جواب دیا ہے۔یاد رہے یہ دراصل عمران خان کی پالیسی ہے جس پر عمران خان بیس سال سے کھڑا ہے کہ پاکستان کو کسی دوسرے کی جنگ کا حصہ نہیں بننا۔ارشاد بھٹی نے مزید کہا کہ آج عمران

خان کا وہ موقف افواجِ پاکستان کی پالیسی بن چکی ہے۔یاد رہے یہ دراصل عمران خان کا پالیسی ہے جس پر عمران خان بیس سال سے کھڑا ہے کہ پاکستان کو کسی دوسرے کی جنگ کا حصہ نہیں بننا اور آج عمران خان کا وہ موقف افواجِ پاکستان کی پالیسی بن چکی ہے۔جب کہ امریکی وزیر خارجہ مائیک پومپیو نے کہا کہ ایران خطے میں صورتحال کو کشیدہ کرنا چاہتا ہے۔ خطے میں امریکی مفادات کا تحفظ کررہے ہیں۔انہوں نے کہا کہ امریکی مفادات ، اہلکاروں اور تنصیبات اور شراکت دارو ں کا تحفظ کریں گے۔واضح رہے کہ امریکی فورسز نے جمعہ کے روز عراق کے دارالحکومت بغداد میں کیے گئے ایک فضائی حملے میں ایران کے پاسداران انقلاب القدس فورس کے سربراہ سمیت 8 افراد کو ہلاک کر دیا تھا۔ اس واقعے کے بعد مشرق وسطیٰ کے حالات مزید کشیدہ ہو چکے ہیں۔



اس وقت سب سے زیادہ مقبول خبریں


Copyright © 2017 https://pakistanlivenews.com All Rights Reserved
About Us | Privacy Policy | Disclaimer | Contact Us