ایرانی صدر کا ترک صدر کو ٹیلی فون،علاقائی اتحاد بنانیکی تجویز


تہران(آن لائن) امریکہ اور ایران کے درمیان جاری غیر معمولی کشیدگی کے پیش نظر ایرانی صدر ڈاکٹر حسن روحانی نے ترک ہم منصب رجب طیب اردوان سے ٹیلی فونک رابطہ کیا ،جس میں علاقائی اتحاد بنانے کی تجویز پر غور کیا گیا ،ترک صدر کی قاسم سلیمانی کی ہلاکت پر مذمت،تعاون کی یقین دہانی کرائی۔ایرانی سرکاری خبر رساں ادارے کے مطابق

Advertisement

ایرانی صدر ڈاکٹر حسن روحانی نے ترک صدر رجب طیب اردوان سے رابطہ کیا ہے ،جس میں جنرل قاسم سلیمانی کی ہلاکت کے بعد پیدا ہونیوالی کشیدگی اور خطے کے امن سے متعلق تفصیلی تبادلہ خیال کیا گیا ۔ایرانی صدر نے ترک ہم منصب سے بات چیت کے دوران کہا کہ جنرل قاسم سلیمانی کی ہلاکت کے بعد ہم اگر امریکی اقدام کیخلاف اکٹھے نہ ہوئے تو بڑا خطرہ پورے خطے کے امن کو تباہ کر دے گا،جنرل قاسم سلیمانی کی ہلاکت بہت بڑی غلطی ہے، اگر امریکی اقدام کیخلاف خاموش رہے تو دشمن زیادہ جرآتمند اور جارحانہ رویہ اپنا لے گا، ہماری قوم اس وقت افسردہ ہے،حسن روحانی کا کہنا تھا کہ ایران اور ترکی نے ایک دوسرے کو پیچیدہ مسائل پر سپورٹ کیا ہے، قرآن پاک بھی ہمیں سکھاتا ہے کہ نہ ہم کسی پر ظلم کریں گے اور نہ ہی اپنے پر ظلم ہونے دیں گے۔ترک صدر رجب طیب اردوان کا کہنا تھا

کہ جنرل قاسم سلیمانی کی ہلاکت کے بعد بہت افسردہ ہوں، قاسم سلیمانی کی ہلاکت کے بعد آیت اللہ خمینی اور ایرانی قوم سے تعزیت کرتا ہوں۔ان کا کہنا تھا کہ جلد ایران کا دورہ کروں گا جہاں پر ترکی اور تہران کے درمیان خطے کی صورتحال سمیت دیگر ایشو پر تبادلہ خیال کیا جائے گا

 



اس وقت سب سے زیادہ مقبول خبریں


Copyright © 2017 https://pakistanlivenews.com All Rights Reserved
About Us | Privacy Policy | Disclaimer | Contact Us