نواز شرف جنرل قمر باجوہ کی مدت ملازمت میں توسیع کے حق میں نہیں


اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک)سینئرصحافی حامد میر کا کہنا ہے کہ سابق وزیراعظم نواز شریف آرمی چیف کی مدت ملازمت میں توسیع کے حق میں نہیں ہیں۔تفصیلات کے مطابق سینئر صحافی حامد میر کا کہنا تھا کہ چیف الیکشن کمشنر اور الیکشن کمیشن کے اراکین کی تعیناتی پر بھی حکومت اور حزب اختلاف کو بیٹھنے کی ضرورت ہے۔ حامد میر کا مزید کہنا تھا کہ سابق وزیراعظم نواز شریف آرمی چیف کی مدت ملازمت میں توسیع کے حق میں نہیں

ہیں، نواز شریف نے اپنے دور حکومت میں آرمی چیف راحیل شریف کی مدت ملازمت میں توسیع کے حوالے سے دباؤ قبول نہیں کیا تھا۔آرمی چیف کی مدت ملازمت کے ترمیمی بل کے حوالے ان کا کہنا تھا کہ اس معاملے پر حکومت اور حزب اختلاف میں غیر رسمی روابط کا سلسلہ جاری ہے اور وہ اس پر حکومت کا ساتھ دیں گے۔جب کہ دوسری جانب وفاقی وزیر سائنس اینڈ ٹیکنالوجی فواد چوہدری کا کہنا ہے کہ فیصلے کے بعد وزیر اعظم، آرمی چیف کو 64 سال کے بعد توسیع نہیں دے سکیں گے، سپریم کورٹ کا یہ فیصلہ تھا کہ آرمی چیف کی ریٹائرمنٹ کا تعین انکی مدت ملازمت سے کیا جائے، جو کہ درست نہیں تھا۔انھوں نے بتایا کہ 56 اور 62 کے آئین میں اس بات کا فیصلہ کیا گیا تھا کہ آرمی چیف اپنی مدت ملازمت کو مکمل کرینگے چاہے انکی عمر جو بھی ہو وہ اپنی ملازمت کی مدت کو مکمل کرینگے جبکہ

1973 کے آئین میں یہ فیصلہ کیا گیا تھا کہ وزیر اعظم کو طاقت کا سرچشمہ ہونا چاہیے جوکہ عوام کا نمائندہ ہوتا ہے، آرمی چیف کی مدت ملازمت کا تعین انکی عمر کے حساب سے کیا جائے جب انکی ملازمت کی عمرختم ہو جائیگی وہ ریٹائر ہو جائینگے، لیکن اگر وزیر اعظم انہیں برقرار رکھنا چاہیں تو اسے توسیع دے سکتے ہیں۔انکا کہنا ہے کہ سپریم کورٹ کی جانب سے یہ فیصلہ دیا گیا تھا کہ آرمی چیف کی ریٹائرمنٹ کا تعین انکی ملازمت کے ذریعے سے کیا جائے جو کہ درست فیصلہ نہیں ہے اور اسے ریویو میں جانا چاہیئے تھا۔ اس تجویز میں یہ فیصلہ کیا گیا ہے کہ آرمی چیف کی ملازمت کی عمر 64 سال ہو گی اسکے بعد وزیر اعظم آرمی چیف کو تو سیع نہیں دے سکیں گے۔ انھوں نے مزید بتایا کہ اس کے بارے میں ابھی طویل بحث ہے جو کہ پارلیمنٹ میں ہو گی جس میں آرمی چیف سے نچلے رینک رکھنے والے افسران کی مدت ملازمت کا تعین کیا جائیگا، کیونکہ اگر ایک میجر جنرل اگر 57 سال کی عمر میں آرمی چیف کا عہدہ کو سنبھالے تو وہ 7 سال تک آرمی چیف رہے گا، اس بات کا فیصلہ کرنا ہو گا۔



اس وقت سب سے زیادہ مقبول خبریں


Copyright © 2017 https://pakistanlivenews.com All Rights Reserved
About Us | Privacy Policy | Disclaimer | Contact Us