پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اضافےسےمہنگائی کاطوفان آیا


اسلام آباد(نیوز ڈیسک ) پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اضافےسےمہنگائی کاطوفان آیا۔سال2019 میں پٹرولیم مصنوعات23روپے02پیسےفی لیٹرتک مہنگی کرکےحکومت نے ریکارڈ اپنے نام کیا۔تحریک انصاف کی حکومت نے پٹرولیم مصنوعات میں کئی بارتبدیلی کرکےنئےریکارڈقائم کیے۔جنوری سےدسمبر2019 کےدوران پٹرول 23 روپے02 پیسے

فی لیٹرتک مہنگا ہوا،پٹرول90روپے97پیسےسےبڑھ کر113روپے99پیسے فی لیٹرہوگیا۔ہائی اسپیڈڈیزل18روپے 42 پیسے فی لیٹرمہنگاکیاگیا،جس کےبعداس کی قیمت 106روپے68پیسے سےبڑھ کر125 روپے ایک پیسہ فی لیٹرہوگئی۔لائٹ ڈیزل7 روپے15پیسےفی لیٹرمہنگاکیاگیا جو75 روپے 28پیسےسےبڑھ کر82روپے43پیسےفی لیٹرہوگیا۔بات صرف یہاں ہی ختم نہیں ہوتی بلکہ پہاڑی علاقوں میں اورخصوصا غریب عوام کےاستعمال کا ایندھن مٹی کاتیل13روپے37پیسے فی لیٹر مہنگا کیا گیا جس کی قیمت 82 روپے 98 پیسےسےبڑھ کر96روپے35پیسےفی لیٹرہوگی۔جنوری2019میں عالمی منڈی میں خام تیل کی قیمت 54 ڈالر فی بیرل تھی جودسمبر2019 میں65 ڈالر فی بیرل ہوگئی۔ رواں برس پٹرولیم مصنوعات پرسیلز ٹیکس کی شرح 17فیصدبرقراررہی جبکہ بجٹ خسارہ پوراکرنےکیلئےعوام کوریلیف دینےکی بجائے مہنگائی کا بوجھ ڈالا گیا۔



اس وقت سب سے زیادہ مقبول خبریں


Copyright © 2017 https://pakistanlivenews.com All Rights Reserved
About Us | Privacy Policy | Disclaimer | Contact Us