چیف جسٹس گلزار احمد نے پہلی درخواست ہی مسترد کر دی


اسلام آباد(آن لائن)چیف جسٹس پاکستان کی حییثیت سے جسٹس گلزار احمد نے اپنی عدالت میں آنے والی پہلی درخواست ہی مسترد کرد ی ۔بطور چیف جسٹس پہلے کیس کی سماعت میں انہوں نے پٹواری محمد نواز کی بر طرفی کیخلاف اپیل مسترد کی۔سپریم کورٹ کے سربراہ نے پٹواری کے وکیل سے استفسار کیا کہ آپ تو درخواستگزار ہیں احسان اللہ گرداور کے

معاملے کو بیچ میں کیوں لا رہے ہیں، اس کو تو پنشن مل گئی ہے۔چیف جسٹس نے ریمارکس دیے کہ محمد نواز کا تو معاملہ ثابت ہے اس نے عدالتی حکم کے برخلاف کام کیا، محمد نواز پٹواری مس کنڈکٹ کا مرتکب پایا گیا ہے۔وکیل پٹواری نے مؤقف اپنایا کہ بوجھ سارا پٹواری پر ڈال دیا گیا لیکن گرداور اور تحصیلدار بھی اس عمل میں ملوث تھے۔جسٹس منصور علی شاہ نے استفسار کیا کہ وکیل صاحب آپ پٹواری محمد نواز کا کیس ہمیں بتائیں،انکوائری ہوئی اور فیصلہ محمد نواز صاحب کیخلاف آیا ہے۔چیف جسٹس نے ریمارکس دیے کہ آپ تحصیلدار اور گرداور کو کیس میں شامل کرنا چاہتے ہیں جسکا ریکارڈ ہمارے سامنے موجود نہیں، ہم اس معاملے پر ایگزیکٹو کے معاملات میں مداخلت نہیں کریں گے۔خیال رہے کہ جسٹس گلزار احمد نے گزشتہ روز ہی چیف جسٹس پاکستان کا حلف اٹھایا تھا۔ وہ پاکستان کے 27ویں چیف جسٹس ہیں اور یکم فروری 2022کو ریٹائر ہوجائیں گے



اس وقت سب سے زیادہ مقبول خبریں


Copyright © 2017 https://pakistanlivenews.com All Rights Reserved
About Us | Privacy Policy | Disclaimer | Contact Us