باز نہ آئے تو پھر آئیں گے۔۔مشرف کیس کے سابق پراسیکیوٹر اکرم شیخ کے گھر پر ڈکیتی۔۔ڈاکو گھر میں کون سی خاص فائل تلاش کرتے رہے؟ جانئے


سلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک ) معروف قانون دان اکرم شیخ کے گھر ڈکیتی کی واردات پیش آئی ہے۔میڈیا رپورٹس کے مطابق ڈاکو 6 لاکھ روپے کی نقدی،موبائل،قیمتی گھڑیاں اور دیگر سامان لوٹ کر فرار ہو گئے ہیں۔واردات صبح 5 بجے شہزاد ٹاؤن کے علاقے میں ہوئی۔

ڈاکوؤں نے اکرم شیخ کو اہلخانہ سمیت گن پوائنٹ پر دو گھنٹے تک یرغمال بنائے رکھا۔
لیکن حیران کن بات یہ ہے کہ پولیس دو گھنٹے کے دوران وہاں نہ پہنچ سکی۔پولیس معمول کی کاروائی میں مصروف ہے۔اسی حوالے سے سینئیر صحافی حامد میر نے ٹویٹ کیا ہے کہ نامعلوم افراد نے دو گھنٹے تک اکرم شیخ کو یرغمال بنائے رکھا،ڈاکو اکرم شیخ کے گھر کی تلاشی لیتے رہے۔حامد میر نے مزید کہا کہ مسلح افراد نے جاتے ہوئے اکرم شیخ کو دھمکی دی کہ “باز نہ آئے تو پھر آئیں گے”۔ جب کہ معروف صحافی عمر چیمہ نے ٹویٹ کیا کہ ایک مستند ذریعے نے بتایا ہے کہ مسلح افراد گھر والوں سے پرویز مشرف ایمرجنسی نفاذ کی ایف آئی اے رپورٹ کے بارے میں دریافت کرتے رہے۔ جس دستاویز کا مسلح افراد اکرم شیخ کے فارم ہاؤس پر معلوم کرتے رہے وہ روزنامہ جنگ میں انصار عباسی شائع کر چکے ہیں۔ اکرم شیخ سپریم کورٹ کے سینئیر وکیل ہیں،وہ مشرف کیس کے سابق پراسیکیوٹر اکرم شیخ تھے۔

خیال رہے کہ سینئر قانون دان بیرسٹراکرم شیخ نے جسٹس وقار سیٹھ کو ہراساں کرنے پراقوام متحدہ جانے کا اعلان کیا تھا۔انہوں نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ میں اس ایشو کو اقوام متحدہ میں لے کرجاؤں گا کہ یہ ججز کو ہراساں کررہے ہیں۔ انہوں نے پہلے شوکت صدیقی کو ہراساں کیا، قاضی فائز عیسیٰ کو ہراساں کیا، اب جسٹس وقار احمد سیٹھ کو ہراساں کررہے ہیں۔ان کو کوئی پوچھنے والا نہیں ہے؟ بیرسٹراکرم شیخ نے کہا کہ میں اقوام متحدہ کے سیکرٹری جنرل کے سامنے معاملے کو لے کرجاؤں گا۔



اس وقت سب سے زیادہ مقبول خبریں


Copyright © 2017 https://pakistanlivenews.com All Rights Reserved
About Us | Privacy Policy | Disclaimer | Contact Us