فوڈیشری کے نظام میں اصلاحات کی ضرورت ہے، بریگیڈئیر (ر)حارث نواز


اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک)دفاعی تجزیہ کار بریگیڈئیر (ر)حارث نواز کہتے ہیں کہ وکلا اور ایڈووکیٹس کو جج نہیں بننا چاہیے۔ نجی ٹی وی چینل اے آر وائی نیوز سے گفتگو کرتے ہوئے بریگیڈئیر (ر)حارث نوازکا کہناتھا کہ سیاسی جماعتوں کی سرپرستی میں وکلا اور ایڈووکیٹس کا بطور جج تقرری کا سلسلہ بند ہونا چاہیے۔ پبلک سروس کمیشن کے تحت ججوں کی تقرری

عمل میں لاتے ہوئے اس بات کوبھی یقینی بنانا چاہیے کہ کیا وہ اپنی ذہنی استعداد کار کے اعتبا ر سے جج بننے کے لائق بھی ہیں یا نہیں۔ آج کے تفصیلی فیصلے کے بعد جوڈیشری کے نظام میں اصلاحات لایا جانا ناگزیر ہو گیا ہے۔



اس وقت سب سے زیادہ مقبول خبریں


Copyright © 2017 https://pakistanlivenews.com All Rights Reserved
About Us | Privacy Policy | Disclaimer | Contact Us