اتوار‬‮   23   ستمبر‬‮   2018
           

30سال ہوگئے ،عائشہ جیسا معاملہ نہیں دیکھا، میں وزرات عظمی ہی چھوڑ دوںگا۔۔۔وزیراعظم نے دھماکے دار بیان دے ڈالا


اسلام آباد(مانیٹرنگ ڈیسک) نو منتخب وزیر اعظم شاہد خاقان عباسی کا کہنا ہے کہ وہ اپنی قیادت کے کہنے پر وزیراعظم بنے ہیں۔اور ان کے وزیر اعظم کے عہدے پر رہنے کی مدت کا فیصلہ قیادت ہی کرے گی۔ نجی ٹی کو انٹرویو دیتے ہوئے شاہد خاقان عباسی کا کہنا تھا کہ میں نے یہ بات کبھی نہیں کہی کہ چھوٹی کابینہ ہونی چاہیے۔ کسی وزیر کو دو ڈویژن ملنا

مناسب نہیں ہیں اس لیے 49وزرا کی کابینہ ضروری ہے۔ان کا کہنا تھا کہ یہ تعداد بھی میری رائے کے مطابق کم ہے ۔کیونکہ وزیر کی تنخواہ بچانے کیلئے ا ربوں روپے کی فیصلہ سازی پر سمجھوتہ کرنا دانشمندی نہیں ہے۔ وزیراعظم کا کہنا تھا کہ شہباز شریف کیلئے وزرات عظمی سے کسی بھی وقت وزارت عظمی سے دستبردار ہونے کوتیارہوں ۔انھوں نے ایک بار پھر کہا کہ میاں نواز شریف ہی اصل وزیراعظم ہیں۔ آئین کے آرٹیکل 62اور 63کے حوالے سے ان کا کہنا ہے کہ اس میں کافی ابہام موجود ہے۔اس لیے اس بارے میں پارلیمنٹ میں تمام سیاسی جماعتوں سے بات کی جائے گی۔عائشہ گلا لئی کے حوالے سے وزیراعظم شاہد خاقان عباسی نے نجی ٹی وی کو اپنے انٹرویو میں کہا کہ میں 30سال سے سیاست میں ہوں کبھی ایسا واقعہ نہیں سنا۔اور اس معاملے کو پارلیمنٹ میں حل کرنا ہی درست فیصلہ ہوگا.عائشہ گلا لئی کے حوالے سے وزیراعظم شاہد خاقان عباسی نے نجی ٹی وی کو اپنے انٹرویو میں کہا کہ میں 30سال سے سیاست میں ہوں کبھی ایسا واقعہ نہیں سنا۔اور اس معاملے کو پارلیمنٹ میں حل کرنا ہی درست فیصلہ ہوگا

اس وقت سب سے زیادہ مقبول خبریں
تازہ تر ین
دلچسپ و عجیب
روحانی دنیا
تمام اشاعت کے جملہ حقوق بحق ادارہ پاکستان لائیو نیوز محفوظ ہیں۔
Copyright © 2016 Pakistan Live News. All Rights Reserved
   About Us    |    Privacy policy    |    Contact Us