بدھ‬‮   22   اگست‬‮   2018
           

28جولائی سے اب تک عوام نے عدلیہ کے فیصلے کو تسلیم کیا یانوازشریف کے بیان یے کو؟؟؟اگر تاحیات نا اہلی یا جیل بھی ہو گئی تو عوام کیا کریں گے؟؟جاویدچودھری کے تہلکہ خیز انکشافات


اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک) ملک کے سینئر صحافی اور تجزیہ کار جاوید ہاشمی نے کہا ہے کہ نا اہلی سے لے کراب تک میاں نوازشریف کے عدلیہ مخالف بیانیے کو پذیرائی مل رہی ہے ۔ اپنے ایک پروگرام کے دوران انھوںنے تجزیہ پیش کرتے ہوئے کہا کہ 28جولائی سے لے کر اب تک اگر دیکھا جائے جلسے جلسوںمیں عوام کی تعداد ہو یا این اے 120یا این اے

154یا پھر چکوال کے ضمنی الیکشن کے نتائج۔ آپ کو واضح نظر آئے گا کہ نوازشریف کا یہ کہناکہ ان کے ساتھ نا انصافی ہوئی ہے۔ اور ان کے خلاف فیصلے کرنے والے ججز انتقام لے رہے ہیں۔ اور بغض رکھتے ہیں ۔ ان کا یہ سٹنٹ بھرپور کامیاب ہواہے۔ عوام نے ان کے خلاف کیے گئے فیصلوں کو تسلیم نہیں کیا بلکہ ان کے عدلیہ مخالف بیانیے کو درست سمجھا ہے۔ نوازشریف اورووٹرز کے درمیان فاصلہ بڑھا نہیں بلکہ کم ہواہے۔ان کی مقبولیت کا گراف نیچے نہیں آیا بلکہ اوپر ہی گیا ہے۔ اب آج پیش آنے والے تین واقعات لے لیں۔ ان کے خلاف دو نئے ضمنی ریفرنسز سماعت کےلئے منظور ہو گئے۔ ان کی ناہلی کی مدت کا فیصلہ بھی محفوظ ہو گیا ۔ اور نیب نے وزارت داخلہ کو ان کا نام ای سی ایل میں بھی ڈالنے کی سفارش کر ڈالی۔ آپ دیکھیں گے کہ نوازشریف ان تینوں اقدامات کے خلاف بھی جو رد عمل ظاہر کریں گے اسے بھی پذیرائی ملے گی۔ چاہے وہ تاحیات نا اہل ہو جائیں۔ چاہے انھیں جیل بھجوا دیا جائے یا بیرون ملک جانے سے روک دیا جائے ۔ نوازشریف کا بیانیہ اس سب پر ایسا کام دکھائے گا کہ اگلی حکومت پھر مسلم لیگ (ن) کی ہوگی۔ یہی عوام کا فیصلہ یا ریفرنڈم ہو گا ۔ جس کا مطلب ہے کہ عوام نے عدلیہ کے فیصلوں کے ساتھ ساتھ عمران خان اور آصف زرداری کے بیانیے کو بھی مسترد کر دیا ہے ۔

اس وقت سب سے زیادہ مقبول خبریں
تازہ تر ین
دلچسپ و عجیب
روحانی دنیا
تمام اشاعت کے جملہ حقوق بحق ادارہ پاکستان لائیو نیوز محفوظ ہیں۔
Copyright © 2016 Pakistan Live News. All Rights Reserved
   About Us    |    Privacy policy    |    Contact Us