منگل‬‮   22   مئی‬‮   2018
           

عراقی صدر صدام حسین اپنی پھانسی کی صبح ایک ایسا کام کرتے رہے جس سے پہرے دار فوجیوں کو بہت ڈر لگتا رہا،،اور پھر ایک ایسی چیز مانگ لی کہ فوجیوں کی حیرانی اپنی انتہا ک چھو گئی، ایمان افروز واقعہ


بغداد (مانیٹرنگ ڈیسک)عراق کے صدر صدام حسین کی پھانسی کی صبح کی تفصیلات بتاتے ہوئے امریکی فوجیوں نے حیران کن انکشافات کر ڈالے ہیں۔ انھوں نے کہا کہ پھانسی کی صبح سابق عراقی صدر اٹھے اور انھوںنے نماز فجر ادا کی اور قرآن کریم کی تلاوت کی۔ پہرے دار فوجیوں کا کہنا ہے کہ ایک بات سے ہمیں مسلسل خوف محسوس ہو رہا تھا اور وہ یہ

Image result for saddam hussein

تھی کہ وہ مسلسل مسکرا رہے تھے۔ ان کی مسکراہٹ سے ہمیں خوف آرہا تھا ۔جیسے ان کی نہیں بلکہ ہماری موت آنے والی ہے اور کوئی بم پھٹنے والا ہے۔ پہرے دار فوجیوں کا کہنا ہے ایک حیران کن اور غیر معمولی اطمینان تھا ان کے چہرے پر۔ پھر انھوںنے اپنی پسند کا ناشتہ کیا ۔ اور ایک فوجی کو ایک انتہائی گرم کوٹ لانے کو کہا۔ تاکہ سردی کی وجہ سے ان کو کپکپاہٹ محسوس نہ ہو اور لوگ یہ نہ سمجھیں کہ موت کے خوف سے کانپ رہے ہیں۔ فوجی نے خاص طور پر بتایا کہ صدام حسین پھانسی پانے سے قبل مسلسل مسکراتے رہے یہاں تک کہ کلمہ شہادت پڑھتے ہوئے دنیا سے رخصت ہوئے۔

Image result for saddam hussein

Image result for saddam hussein

Image result for saddam hussein

Image result for saddam hussein

اس وقت سب سے زیادہ مقبول خبریں
تازہ تر ین
دلچسپ و عجیب
روحانی دنیا
تمام اشاعت کے جملہ حقوق بحق ادارہ پاکستان لائیو نیوز محفوظ ہیں۔
Copyright © 2016 Pakistan Live News. All Rights Reserved
   About Us    |    Privacy policy    |    Contact Us