پیر‬‮   25   جون‬‮   2018
           

اللہ تعالیٰ چار آدمیوں کی بخشش اس رات میں بھی نہیں فرماتے


اس حدیث میں ارشاد فرمایا گیا ہے کہ اللہ تعالیٰ چار آدمیوں کی بخشش اس رات میں بھی نہیں فرماتے۔ رمضان المبارک میں جیسا کہ آپ نے سنا ، ہر رات دس لاکھ ایسے آدمیوں کی بخشش کی جاتی ہے کہ جن پر جہنم واجب ہوچکی تھی ، اور ان سے فرمادیا جاتا ہے کہ : ”جاو¿ ! آزاد کیا“ اور رمضان المبارک کی آخری رات میں اتنے لوگوں کو معاف کیا جاتا ہے ،جتنے لوگوں کو یکم رمضان سے آخری رات تک معاف کیا گیا تھا ، اللہ اکبر ! اتنے لوگوں کو آزاد کیا جاتا ہے ، رمضان المبارک میں رحمتِ الہٰی کا گویا سیلاب ہے ، جو بندوں کے گناہوں کو بہا کرلے جاتا ہے ، لیکن چار آدمیوں کی بخشش رمضان المبارک کی عام راتوں میں تو کیا ، شبِ قدر میں بھی نہیں ہوتی ، بھئی ان سے بڑھ کر بدقسمت کون ہوگا؟ شبِ قدر میں جب کہ اللہ تعالیٰ کی جانب سے معافی کا اعلان

کیا جارہا ہے ، ان کی بخشش نہیں ہورہی۔وہ چار کون ہیں ؟ ایک تو شراب کا عادی ، ایسا بلا نوش کہ جس نے شراب سے توبہ نہ کی ہو، اور اس گناہ سے توبہ کرنے کی اس کو توفیق نہ ہوئی ہو۔

اس وقت سب سے زیادہ مقبول خبریں
تازہ تر ین
دلچسپ و عجیب
روحانی دنیا
تمام اشاعت کے جملہ حقوق بحق ادارہ پاکستان لائیو نیوز محفوظ ہیں۔
Copyright © 2016 Pakistan Live News. All Rights Reserved
   About Us    |    Privacy policy    |    Contact Us